الطاہر

الطاہر شمارہ نمبر 44
ربیع الاول ۱۴۲۸ھ بمطابق اپریل ۲۰۰۷ع

اردو مین پیج

حمد باری تعالیٰ

 

وحدہ اور بے مثال ہے تو
مالک الملک ذوالجلال ہے تو

ہے بظاہر ہر شئی سے الگ
اور سب کا شریک حال ہے تو

کُن سے کون و مکاں کیے پیدا
خالقِ کُل وہ باکمال ہے تو

ہے زوال ہر کمال کو لیکن
تو وہ کامل کہ لازوال ہے تو

نکتہ دانوں سے حل جو ہو نہ سکا
وہ معمَّہ ہے وہ سوال ہے تو

حسن عالم ہے جس کا عکس حسیں
وہ حسیں صاحب جمال ہے تو

کیا بشر کرسکے ثنا تیری
برتر از ذہن ہے خیال ہے تو

شاعر: خادمی اجمیری