[ فہرست ]

تحفۂ حبیب

 

حدیث نمبر ۲

فضائلِ کلمہ طیّبہ

عَنْ عُبَادَةَ بْنِ الصَامِتِ قَالَ سَمِعْتُ رَسُوْلَ اللهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ يَقُوْلُ مَنْ شَهِدَ اَنْ لَّآ اِلٰهَ اِلَّا اللهُ وَ اَنَّ مُحَمَّدًا رَّسُوْلُ اللهِ حَرَّمَ اللهُ عَلَيْهِ النَّارَ.

رواہ مسلم، مشکوٰۃ ص۱۵۔

حضرت عبادہ بن صامت رضی اللہ عنہ سے روایت ہے، فرماتے ہیں کہ میں نے رسول خدا صلّی اللہ علیہ وسلم سے سنا، فرما رہے تھے کہ جس نے یہ گواہی دی کہ اللہ تعالیٰ کے سوا کوئی معبود نہیں اور یہ کہ حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم اللہ کے رسول ہیں، اللہ نے اس پر جہنم کو حرام کردیا۔

وضاحت

کلمہ طیبہ اسلام کا بنیادی اوّلین رکن ہے۔ صدق دل سے کلمہ پڑھنے سے مشرک مؤمن بن جاتا ہے اور جہنمی جنتی بن جاتا ہے۔ اسلام سے پیشتر کسی نے خواہ کتنے گناہ کئے، کفر و شرک، بت پرستی وغیرہ تک کے کبیرہ گناہوں میں مبتلا رہا ہو، کلمہ طیبہ پڑھ کر دائرہ اسلام میں داخل ہوتے ہی اس کے سارے گناہ معاف کردیئے جاتے ہیں۔ جیسا کہ حدیث شریف میں ہے

اِنَّ الْاِسْلَامَ يَهْدِمُ مَا كَانَ قَبْلَهٗ.